شہ سرخیاں

نان رجسٹرڈ پریس کلب سرکاری بلڈنگ میں اور رجسٹرڈ کلب نیشنل پریس کلب لودہراں کرائے کی بلڈنگ میں

لودہراں(بیورورپورٹ)مقامی نان رجسٹرڈ پریس کلب سرکاری بلڈنگ میں اور رجسٹرڈ کلب نیشنل پریس کلب لودہراں کرائے کی بلڈنگ میں۔مقامی نان رجسٹرڈ پریس کلب کے رقبہ میں سے آدھا رقبہ نیشنل پریس کلب لودہراں کو دیا جائے۔ڈپٹی کمشنر راجہ خرم شہزاد ایکشن لیں۔نیشنل پریس کلب لودہراں کے عہدے داران عمران علی اعوان،ڈاکٹر محمد اعظم،رانا انوار احمدراشد سومرو،ڈاکٹر محمد عباس ،،کامران چغتائی،چوہدری محمد طارق،مزمل حسین اجاگر،محمد ارشد بھٹی ،چوہدری عبدالستار،رانا ریاض احمد،محمد محسن،سلطان محمود راؤ،رانا زاہد اقبال،حکیم محمد اشرف،چوہدری محمد ایوب،راؤ عبدالوہاب،راؤ عبدالحفیظ،سید عامر شاہ،ملک محمد شہباز لودہرا،راؤ محمد قاسم،محمد ارشد بھٹی،ملک عبدالستار،محمد اسلم منڈیرنا،شوکت شمعون چوہدری،راؤ رونق علی خان،عبدالغفور بھٹی،عبدالرؤف سمراء،رانا سرفراز احمد،سید ارشاد بخاری،محمد عتیق بھٹہ اور دیگر لودہراں کے سینیر صحافیوں سید باقر رضوی،رانا ظہور احمد،محمد ادریس بھٹی ،ظفر آفتاب اور دیگر کا مطالبہ۔تفصیل کے مطابق لودہراں کے سینیر صحافیوں نے کہا ہے کہ اس وقت نیشنل پریس کلب لودہراں رجسٹرڈ ادارہ ہے اور مقامی پریس کلب نان رجسٹرڈ ادارہ ہے ۔محکمہ مال کی نا اہلی ،غفلت کی وجہ سے نان رجسٹرڈ کلب کو سرکاری رقبہ دے دیا گیا ہے ۔سامنے ناجائز طور پر دکانیں بنا دی گئی ہیں اور ان دکانوں کے حوالے سے سابق اے سی لودہراں نے کالونی ایکٹ کے تحت 32,34کی کاروائی کا بھی حکم دیا تھا لیکن یہ دکانیں ابھی تک مسمار نہیں کی گئیں ۔نیشنل پریس کلب (رجسٹرڈ)لودہراں کے ممبران اور عہدے داران نے کہا کہ یہ سرا سر زیادتی ہے نان رجسٹرڈ پریس کلب کو کس قانون کے تحت سرکاری رقبہ الاٹ کیا گیا ہے اور رجسٹرڈ پریس کلب نیشنل پریس کلب لودہراں کو اس نان رجسٹرڈ کلب کے سرکاری رقبہ میں سے آدھا رقبہ دیا جائے اور اے سی لودہراں خود موقع پر جا کر نیشنل پریس کلب کو قبضہ دیں یا پھر یہ سرکاری رقبہ فوری طور پر اپنی تحویل میں لے لیا جائے اور ریسکیو 1122کو یہ رقبہ دے دیا جائے۔ کیونکہ اس سرکاری رقبہ پر دکانیں بنا کر رقم ہڑپ کی جا رہی ہے اور حکومت کو نقصان ہو رہا ہے۔نیشنل پریس کلب لودہراں کے عہدے داران نے کہا کہ اگر اس مقامی کلب کے رقبہ میں سے آدھا رقبہ ہمیں نہ دیا گیا تو ہم احتجاج پر مجبور ہو جائیں گے۔نیشنل پریس کلب (رجسٹرڈ)لودہراں کے عہدے داران نے ڈپٹی کمشنر لودہراں اور اے سی لودہراں سے سخت ایکشن لینے کا مطالبہ کیا ہے ا ور کہا ہے کہ اس بلڈنگ کو فوری طور پر اپنی تحویل میں لیا جائے۔انہوں نے کہا کہ 30 اپریل تک محکمہ مال کے آفیسران یہ بلڈنگ اپنے قبضہ میں لیں اگر اس تاریخ تک قبضہ مافیا سے قبضہ واگزار نہیں کروایا جاتا تو نیشنل پریس کلب (رجسٹرڈ)لودہراں کے ممبران روزانہ کی بنیاد پر احتجاج کریں گے۔

Share this

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

Powered by Dragonballsuper Youtube Download animeshow