شہ سرخیاں

پانامہ لیکس سے پہلے سرائیکی صوبے کا فیصلہ آنا چاہئے

ملتان( )پانامہ لیکس سے پہلے سرائیکی صوبے کا فیصلہ آنا چاہئے ، وسیب کے کروڑوں انسانوں کے حقوق کا سوال ہے۔ نواز لیگ اپنے منشور پنجاب اسمبلی کی قرارداد اور سینٹ سے دو تہائی اکثریت کے ساتھ سرائیکی صوبے کی آئینی ترمیم کو تسلیم کرتے ہوئے فوری طور پر صوبہ سرائیکستان کا قیام عمل میں لائے۔ ان خیالات کا اظہار سرائیکستان عوامی اتحاد کے رہنماؤں ظہور دھریجہ، خواجہ غلام فرید کوریجہ، سید مہدی الحسن شاہ ، ملک اللہ نواز وینس، عابدہ بخاری ، مطلوب بخاری اور عطا اللہ خان عیسیٰ خیلوی نے جھوک سرائیکی میلہ لاہور کی اختتامی نشست سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ ا س موقع پر ’’ لیجنڈ آف سرائیکی فوک ‘‘ کے اعزاز میں تقریب پذیرائی کا انعقاد ہوااور عطا اللہ خان عیسیٰ خیلوی کی سرائیکی رہنماؤں نے دستار بندی کرائی ۔سرائیکی رہنماؤں نے اپنے خطاب میں کہا کہ ہم ہر سال لاہور میں سانگ رچانے نہیں آتے یہاں آنے کا ایک مقصد ہے وہ مقصد ہے صوبہ سرائیکستان ، ہم ہر سال باور کراتے آ رہے ہیں کہ وسیب کی محرومیاں بڑھنے کے ساتھ تلخیاں اور رنجشیں بھی بڑھتی جا رہی ہیں ۔ اقتدار کے مرکز لاہور کی فاصلاتی دوری کے ساتھ سوچ کے فاصلے بھی بڑھ رہے ہیں ۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ سرائیکی وسیب تاریخی ، ثقافتی اور جغرافیائی طور پر ہمیشہ پنجاب سے الگ اکائی کے طور پر موجود رہا ،اس کی شناخت ، اس کا اختیار، اس کا وہ صوبہ بحال کیا جائے جو سکھوں اور انگریزوں کی یلغار سے پہلے موجود تھا۔ ظہور دھریجہ نے کہاکہ 1970ء کے عشرے میں عیسیٰ خیلوی کی گائیکی سرائیکی کا نیا جنم تھا ۔ انہوں نے اپنی آواز کے ذریعے سرائیکی کا پیغام پوری دنیا تک پہنچایا اور وہ دنیا کے واحد سنگر ہیں جس نے ماسوا اسرائیل دنیا کے تمام ممالک میں پرفارم کیا ۔ تقریب پذیرائی سے خطاب کرتے ہوئے عطا اللہ خان عیسیٰ خیلوی نے کہا کہ آج کی شام میرے لئے یادگار شام ہے ، میں اسے کبھی نہیں بھول پاؤں گا۔ انہوں نے کہا کہ سرائیکی میری ماں بولی ہے ،سرائیکی صوبے کا برسوں سے متمنی ہوں ۔ انہوں نے کہا کہ میں نے لاہور کو زندگی دی مگر اہل لاہور نے میری پذیرائی نہیں کی ۔مگر میرے اعزاز میں تقریب پذیرائی میرے وسیب کے لوگ کر رہے ہیں ، یہ سوال تو میرا بنتا ہے کہ میں نے لاہور کو زندگی دی ، اہل لاہور نے مجھے کیا دیا؟اپنے تاثرات میں الحمرہ کے ایگزیکٹو ڈائریکٹر کیپٹن عطا محمد خان نے جھوک سرائیکی میلہ کے بارے میں کہا کہ سرائیکی میلہ تو ہر سال ہوتا ہے مگر ثقافتی حوالے سے اس سال سرائیکیوں نے لاہورکو فتح کر لیا ہے ۔ جھوک سرائیکی میلہ کی رنگارنگ تقریبات میں عطا اللہ خان عیسیٰ خیلوی ، ان کے صاحبزادے سانول عطا عیسیٰ خیلوی ، مشتاق چھینہ، نسیم سیمی ، ہیر سنگھار، حنا ملک، نادرہ چوہدری، محبوب شاہ ، طارق صابری ، عارف صابری ،صابر لبانہ ،اقبال لاشاری ، دنیا نیوز کے کامیڈین احمد نواز اور دوسروں نے رسیلی اور میٹھی آوازوں میں شاندار سرائیکی گیت پیش کر کے لاہور کی تاریخ کی بے مثال ثقافتی محفل بنا دیا ۔دو روزہ دسویں سالانہ جھوک میلہ کے انعقاد میں شمع بناسپتی اور الحمرہ لاہور کا اشتراک شامل تھا ۔

Share this

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

Powered by Dragonballsuper Youtube Download animeshow