شہ سرخیاں

پنجاب پولیس سنگین وارداتوں پر قابو پانے میں بُری طرح ناکام رہی

لاہور() پاکستان تحریک انصاف کے رکن پنجاب اسمبلی ڈاکٹر مراد راس نے ایک تحریک التوائے کار پنجاب اسمبلی میں جمع کروا دی ہے جس میں کہا گیا ہے کہ نجی اخبار کی خبر کے مطابق پولیس افسروں کے بلند و بانگ دعوﺅں اور اربوں روپے بجٹ ملنے کے باوجود پنجاب پولیس سنگین وارداتوں پر قابو پانے میں بُری طرح ناکام رہی، گزشتہ دو برسوں کے دوران پنجاب میں ڈکیتی، قتل، اغوا برائے تاوان، بھتہ خوری اور چوری کی وارداتوں میں 30 فیصد اضافہ ہوا، ڈکیتی میں مزاحمت پر کئی بے گناہ شہریوں کو موت کے گھاٹ اتار دیا گیا۔ تفصیلات کے مطابق پنجاب پولیس نے رواں مالی سال کے منظور شدہ بجٹ چار ارب 26 کروڑ 42 لاکھ 54 ہزار روپے سے زائد پولیس سکیموں پر خرچ کر ڈالے، پنجاب پولیس نے ڈولفن فورس اور سی ٹی ڈی پر منظور شدہ رقم سے ایک ارب 32 کروڑ روپے زائد لٹا دیئے۔ افسروں کی نا تجربہ کاری کے باعث ڈولفن فورس کے لاہور اور دیگر اضلاع میں دفاتر پر 63 کروڑ 30 لاکھ خرچ کر دیئے گئے مگر ایک بھی دفتر فعال نہ ہو سکا، انسداد دہشتگردی فورس کے دفاتر کی تعمیر کی مد میں 66 کروڑ 61 لاکھ خرچ کئے گئے، چیک پوسٹوں اور افسروں کے دفاتر کی دیواریں اونچی کرنے خار دار تاریں، بیرئیر، سی سی ٹی وی کیمرے، واک تھرو گیٹس لگانے کی مد میں 8 کروڑ 28 لاکھ روپے صرف کئے گئے۔ افسروں نے من پسند عمارتوں کی تعمیر پر 16 کروڑ 70 لاکھ خرچ کر دیئے۔

Share this

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

Powered by Dragonballsuper Youtube Download animeshow